"Jeans pehni khawateen"

Ansar Abbasi on the Aurat March:

اتنے بڑے ملک کے ایک چوک پر کسی مہنگے ادارے میں پڑھنے والی، لاکھوں کی فیسیں دے کر انگلش سیکھنے والی جینز پہنے خواتین نے ایک چھوٹی سی ریلی نکالی، چار پانچ بے ہودہ قسم کے سلوگنز لکھے اور عورت کے لیے اٹھائی گئی ہر آواز کا گلا گھونٹ دیا...‘‘میری ذاتی رائے میں اس شو کے ذریعے عورت آزادی مارچ کے منتظمین کا اصل ایجنڈا ضرور بے نقاب ہوا جس کے سامنے نہ صرف بند باندھنے کی ضرورت ہے بلکہ حکومت، پارلیمنٹ، عدلیہ اور میڈیا کی یہ ذمہ داری ہے کہ عورت کے نام پر کسی بیرونی سازش کو یہاں کامیاب نہ ہونے دیں

- Jang, March 11, 2019